تازہ ترین
صحافی کے تحفظ کے لئے اور مثبت آواز کا ساتھ دینے کے لئے ہمیشہ صحافی برادری کےساتھ ہیں.الیاس چوہان         عمر فاروق رانجھا پاکستان میں وفات پا گئے ہیں.ان للہ و انا الیہ راجعون         پی پی پی یو ایس اے کے سنیر راہنماؤں کا میاں نواز شریف کی سزا کی معطلی کے فیصلے پر اظہار خیال         بادالونا کے مئیر کے اعزاز میں سکائی ویز ریسٹورنٹ میں ظہرانہ۔         تحریک انصاف فرانس لیبر ونگ کے صدر سید ظریف شاہ کی جانب سے ایگزیکٹو باڈی کا اہم اجلاس ایک مقامی ریسٹورنٹ میں منعقد ہوا         تحریک انصاف پاکستان میں تعمیری انقلاب لائے گی۔ شیخ کاشف         پاکستان مسلم لیگ ن کے لیڈران و کارکنان کو دلی مبارکباد۔ محمد نعیم         حنیف عباسی کو اب باہر نکالنا ہوگا، نیازی بنگلہ دیش جائے. سید شاہ خسرو جان         حکومت اوورسیز پاکستانیوں کے مسائل حل کریں باہر ممالک میں مقیم بے یار و مدد پاکستانی عوام حکومت کی مدد کے منتظر ہے.چیف اکرام الدین         چوہدری ناصر علی رانجھا کا عمر فاروق رانجھا کی وفات پر شدید غم اور افسوس کا اظہار         راجہ طاہرکا عمر فاروق رانجھا کی وفات پر شدید غم اور افسوس کا اظہار         سابق صدر پاکستان پیپلز پارٹی سپین عمر فاروق رانجھا کی وفات پر اظہار تعزیت ۔ پاکستان پیپلز پارٹی فرانس         اٹلی حکومت بے روزگار افراد کیلئے ایک نیا قانون لا رہی ہے۔         محرم الحرام میں ہمیں اتحاد پیدا کرنے کی ضرورت ہے محرم کے مقدس مہینے میں باہمی اختلافات بھلا کر اتحاد و اتفاق پیدا کرنا چاہیے۔بندیا اسحاق سماجی رہنما         حکومت شعبہ تعلیم کی بہتری کیلئے اہم اقدامات کریں۔فہمیدہ منگن سماجی رہنما سندھ        

بچوں کی دنیا

وفا دار ہاتھی

یہ کہانی پر انی ہونے کے ساتھ ساتھ سچی بھی ہے ۔یہ بات مغلوں کے دور کی ہے ،آخر ی مغل بادشاہ بہادر شاہ ظفر کا ایک ہاتھی تھا ، نام تھا اُسکا ”مولا بخش “ یہ ہاتھی اپنے مالک کا بے حد وفادار تھا ۔ہاتھی خاصہ بوڑ ھا تھا مگر تھا بہت صحت مند۔ بہادر شاہ ظفر سے پہلے ...

Read More »

بھوری کی کہانی

ماں نے ان کا نام بھوری گوری اور کلورکھا تھا،بھوری اور گوری تو تھی ہی خوبصورت مگر کلو بھی اپنی رنگت کے برعکس بہت پیاری سی تھی،نیلی سبز آنکھیں،سیاہ چمکدار بال چہرہ پر دنیا جہاں کی معصومیت اور بڑی بڑی مونچھیں،ہر چیز کو بڑی غور سے دیکھنے والے کو بھی اس کے بھولپن پر پیار آجاتا،لیکن اس کی زندگی نے ...

Read More »

کچھوے کا غصہ

یہ بہت پرانے زمانے کا قصہ ہے ۔ کہتے ہیں کہ کسی گاؤں سے کچھ فاصلے پر ایک خوب صورت تالاب تھے جس کے کنارے تین دوست رہا کرتے تھے ۔ ان میں ایک راج ہنس تھا ، ایک پیلی کن (حواصل جس کی لمبی سی چونچ کے نیچے تھیلی سی ہوتی ہے ) اور ایک کچھوا ۔ یہ تینوں ...

Read More »

پھول کا جواب

ایک دن ایک شہزادہ اپنے باغ کی سیر کو آیا۔ اُس باغ میں ایک ندی بھی بہتی تھی۔ جسکی لہروں کی آواز سے یوں لگتا تھا جیسے وہ گانا گارہی ہو۔ باغ میں بڑے بڑے درخت تھے جن کے سائے کی وجہ سے ہمیشہ وہاں سے ہمیشہ وہاں ٹھنڈک رہتی تھی۔ بہت ہی نرم ملائم گھاس تھی۔ ایسا لگتا تھا ...

Read More »

ایک کے سو

رائو جی ایک شہر میں دو میاں بیوی رہتے تھے۔ ان کی کوئی اولا نہیں تھی۔ وہ ادھیڑ عمر کے ہو چکے تھے اور بڑھاپے کے دور میں قدم رکھنے والے تھے۔ شوہر بازار میں ایک تاجر کا سامان دوسرے تاجر کی دکان پر پہنچا نتا تھا اور گاہکوں کا سامان ان کی گاڑیوں میں رکھتا تھا۔ شام تک اسے ...

Read More »

عید کی حقیقی خوشی

زینب ایک بڑے سے بنگلے کے مالک وقاص کی چہیتی بیٹی تھی سب سے چھوٹی ہونے کی وجہ سے اسے ماں باپ سے زیادہ پیار ملا وہ ضدکی پکی اور اپنی بات منوانے کی عادی ہوگئی تھی ۔ عید کی آمد میں صرف چند روز باقی تھے اسی وجہ سے زینب نے خرایدی شروع کردی ۔ زینب نے اپنی سہیلیوں ...

Read More »

آم کا پیڑ کیسے گرا؟

”ماں! آج تو اتوار ہے۔ ہمیں پڑھنے نہیں جانا ہے۔ کیا ہم باغ میں جاکر کھیلیں؟“ سنجو نے اپنی ماں سے پوچھا۔ ” کیا تم نے اور انجو نے دانت صاف کرکے منہ ہاتھ دھولیے ؟“ ”جی ہاں! ماں ہم دونوں دانت صاف کرکے منہ ہاتھ دھو چکے ہیں۔ “ آج صبح تو اپنے گاوٴں کا موسم بڑا سہانا لگ ...

Read More »

نافرمان چُن مُن

سگوپال کے کھیت میں ایک مرغی تھی جس کا نام مْن مْن مرغی تھا۔ اس کا ایک چوزہ تھا۔ جسے گوپال کے گھر والے چُن مُن کے نام سے پکارتے تھے۔ چْن مْن تھا بڑا شرارتی اور نافرمان۔ جب دیکھو تب کسی نہ کسی کو ستاتا اور پریشان کرتا۔ اس کی ماں چُن مُن مرغی ہمیشہ اسے نصیحت کرتی لیکن ...

Read More »

چالاک ہرن اور چیتا

چالاک ہرن نہ صرف اپنی پھرتی اورتیزی کی وجہ سے جنگل میں مشہور تھا بلکہ اپنے نام کی طرح بے حد چالاک بھی تھا۔ ایک دن وہ جنگل میں مزیدار پھلوں اور دوسری کھانے پینے کی چیزوں کے لے ے گھوم رہا تھا۔ اگر چہ وہ بہت چھوٹا تھا مگر وہ بالکل بھی خوفزدہ نہیں تھا۔ اسے پتہ تھا کہ ...

Read More »

گلہری کی چھلانگ

وہ سخت گرمیوں کی ایک شام تھی بی گلہری کا گھر بوڑھے برگد میں تھا اور اس کے تمام ننھے منے بچے اپنے سونے والے کمرے میں موجود تھے، اگرچہ اُن کے سونے کا وقت کب کا ہوچکا تھا لیکن وہ ابھی تک جاگ رہے تھے۔ نمو بی گلہری کا سب سے چھوٹا بچہ تھا وہ اپنے بستر پر اچھل ...

Read More »